Home / News / اورنج ٹرین پروجیکٹ میں پی ایچ اے کی کروڑوں کی مبینہ کرپشن

اورنج ٹرین پروجیکٹ میں پی ایچ اے کی کروڑوں کی مبینہ کرپشن

اورنج ٹرین پروجیکٹ میں پارکس اینڈ ہارٹیکلچر اتھارٹی کی کروڑوں روپے کی کرپشن سامنے آگئی ۔

اورنج ٹرین پروجیکٹ میں پودوں کی باغبانی میں کروڑوں روپے کی کرپشن کا انکشاف ہوا تو اینٹی کرپشن متحرک ہوگیا، کروڑوں روپے کی کرپشن پر سورس رپورٹ کی بنیاد پر تحقیقات کا آغاز کردیا ہے۔

ڈپٹی ڈائریکٹر ٹیکنیکل فضل الہی کے مطابق اورنج لائن پراجیکٹ میں مبینہ کرپشن کے حوالے سے ریکارڈ چیک کر رہے ہیں، سورس رپورٹ کے مطابق پلانٹیشن کی مد میں ٹھیکہ جات اپنے من پسند ٹھیکیداروں کو نوازنے کا الزام ہے اور ٹھیکیداروں کو ٹینڈر کے اجراء کے بغیر ہی فارغ کر دیا گیا ہے۔

سورس رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ گرین بیلٹس پر پودے لگانے کے لیے کھودے گئے گڑھے کی قیمت 175 روپے کی بجائے 1950 روپے وصول کی گئی، اور لگائے پودوں کی مارکیٹ قیمت 600 روپے سے 800 روپے ہے جب کہ گرین بیلٹس پر لگائے جانے والے پودوں کی قیمت 3000 روپے فی پودا ادا کی گئی۔

سورس رپورٹ کے مطابق پی ایچ اے افسران اور ٹھیکیداروں نے ملی بھگت سے سرکاری خزانے کو کروڑوں روپے کا نقصان پہنچایا، ساری کرپشن کے ذمہ دار ڈائریکٹر پی ایچ اے زون ون اور دیگر افسران ہیں۔

Share
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Check Also

زمین پر قبضے کے خلاف سمون برادری کا عمر کوٹ پریس کلب کے سامنے احتجاج

ضلع سانگھڑکے علاقے اچھڑوتھرکے رہائشی محمد رمضان سموں، لکمیر سمون وغیرہ نے گاؤں کے معزز …